کرائے کے گھر سے کروڑوں کے گھر تک کا سفر ۔۔ اقرار الحسن کراچی آنے سے شروعات کے دن سے لے کر اب تک کے بارے میں بتاتے ہوئے افسردہ ہوگئے

اقرار الحسن کا شمار پاکستان کے باصلاحیت اور قابل ترین صحافیوں میں ہوتا ہے۔ معروف جرنلسٹ اقرار الحسن نے اپنی فیلڈ میں کافی جدو جہد کی اور آج کا میابی کی دہلیز پر فائز ہیں۔اقرار الحسن صحافتی صلاحیتوں کے ساتھ اچھی شعر و شاعری کا بھی فن رکھتے ہیں اور ہر سال رمضان ٹرانسمیشن میں شعر

و شاعری اور تقریری مقابلوں میں بخوبی جج اپنے فرائض انجام دیتے ہیں۔ سینئر صحافی اقرار الحسن نے اپنا یوٹوب چینل بھی قائم کیا ہوا ہے جہاں ان کے تین لاکھ سے زائد فالوورز موجود ہیں اور صارفین ان کی ویڈیوز کو کافی پسند کرتے ہیں۔ علاوہ ازیں آپ ان کے مشہور پروگرام سر عام سے تو واقف ہی ہوں گے جس کے باعث انہیں حقیقی معنوں میں پذیرائی حاصل ہوئی ہے۔ حال ہی میں سید اقرار الحسن نے اپنے چینل پر ایک ویڈیو جاری کی جس میں انہوں نے اپنے چاہنے والوں کو یہ بتایا کہ وہ کراچی شہر چھوڑ کر لاہور شفٹ ہورہے ہیں۔ ان کے چاہنے والے متعدد مداح ان کے فیصلے پر افسوس پر اظہار افسوس کر رہے ہیں اور بہت لوگ انہیں لاہور شہر شفٹ ہونے پر ویلکم کہتے دکھائی دے رہے ہیں۔ اقرار الحسن نے شہر کراچی چھوڑنے

کا فیصلہ کیوں کیا؟ انہوں نے ویڈیو میں بتایا کہ شہر کراچی سے ان کی کئی یادیں جڑی ہیں۔انہوں نے بتایا کہ ان کے بیٹے پہلاج نے اسی شہر میں آنکھ کھولی ، پہلا آنسو بھی اسی شہر میں گرایا،بیٹے کے اسکول کا پہلا دن بھی اسی شہر میں دیکھنا نصیب ہوا۔ انہوں نے بتایا کہ 12 سال قبل جب کراچی آئے تھے تو اپنا پہلا سفر رکشے میں طے کیا تھا۔پہلا کھانا سندھی مسلم میں کھایا تھا ،اس کے بعد کراچی کا برنس روڈ ، بوٹ بیسن اور پھر گیسٹ ہاؤس کے مقیم رہے۔ ان کا کہنا تھا کہ کراچی میں چند سال تو ہم کرائے کے گھر میں رہے تھے۔ نارتھ ناظم آباد کے علاقے سے کراچی کے پوش علاقے ڈیفنس میں شفٹ ہوئے۔ اقرار نے بتایا کہ انہوں نے اپنی پہلی گاڑی کراچی میں خریدی۔ انہوں نے بتایا کہ سب رشتے دار میرے لاہور میں ہے اس لیے وہاں جارہا ہوں۔ لاہور میں میرا گھر زیر تعمیر ہے۔

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *