ذی الحجہ کی 10 تاریخ تک یہ عمل کرلیں

آج کا عمل بہت ہی مجرب اور خاص ہے جس نے بھی کیا ہے اللہ تعالیٰ اس کی ہرحاجت خزانہ غیب سے عطا فرمائی۔ لیکن اس عمل کی اہمیت کو اچھی طرح جاننے کےلیے ضروری ہے کہ آپ تک ان دس دنوں میں کیے جانے والے اعمال کی اہمیت بتا دیں۔ تاکہ آپ خوب لگن اور دلجمعی کےساتھ ا س عمل کو کرسکیں۔

جیسا کہ آپ جانتے ہیں کہ ذی الحج کا مبارک مہینہ چل رہا ہے۔ اور اس مہینے کےدس راتوں کی اس قدرفضیلت حدیث میں آئی ہے کہ اللہ کے نزدیک کوئی عمل اتنا زیادہ محبوب نہیں ۔ جتنا ان دس راتوں کے اندر عمل کیا جاتا ہے۔ یہاں تک بھی روایت میں آتا ہے کہ فرمایاکہ : یکم ذی الحج سے لے کر دسویں ذی الحج تک یہ دن اللہ تعالیٰ کو اتنے زیادہ محبوب ہیں۔ اگر یہ لوگ ایک دن کا روزہ رکھیں۔ تو ایک روزہ سال کے برابر شمار ہوگا۔ تو گویا 9ذی الحج تک نو سال کے روزوں کا ثواب ملے گا۔ اور اسی طرح فرمایا : کہ ان دس راتوں کی عبادت لیلتہ القدر کی رات کے برابر ہے اور آپ جانتے ہیں کہ لیلتہ القدر ایک ہزار مہینوں سے بہتر ہے۔ تو رمضان میں لیلتہ القدر کو ہمیں ڈھونڈنی پڑتی ہے۔ مگر یہاں حضور اکرمﷺ خود فرمار ہے ہیں کہ ذی الحج کی دس راتیں لیلتہ القدر کی راتیں ہیں۔ اور اللہ نے سورت الفجر میں انہی دس راتوں کی قسم کھائی ہے۔تو یہ قسم ہماری والی قسم نہیں ہے کہ

جس پر شک کیا جاسکے ۔ یہ تواللہ کریم کی ایک قسم ہے۔ کہ جن دس راتوں کی اللہ قسم کھارہا ہوتویقیناً ان دس راتوں میں کچھ تو ایساراز چھپا ہوگا ۔ جسے اللہ ہمیں عطا کرنا چاہتا ہے۔ ان دس راتوں کی اہمیت جاننےکےبعد اب ان دس دنوں میں کرنے والا ایک خاص مجرب عمل آپکو بتا دیتے ہیں کہ آپ نے دسویں ذی الحج تک آپ نے روزانہ بعد نماز عشاء اور وتر سے پہلے یعنی آپ نے عشاء کی چار رکعات پڑھ لیں۔ پھر دو سنتیں پڑھ لیں۔ تو وتر پڑھنےسے پہلے آپ نے دو رکعت نفل نماز اس طرح پڑھنی ہے۔ کہ پہلی رکعت میں سورت الفاتحہ کے بعد ایک مرتبہ ” آیت الکرسی ” اور پندر ہ مرتبہ ” سورت اخلاص ” پڑھنی ہے۔ اور جب دوسری رکعات پڑھنی ہو۔ تو دوسری رکعات میں سورت الفاتحہ کے بعد ایک مرتبہ ” سو رت البقرہ ” کا آخری رکوع اور پندرہ مرتبہ “سورت اخلاص ” پڑھ کر سلا م پھیر لیں۔ اور اسکے بعد آپ نے اکتالیس مرتبہ آیت کریمہ پڑھنی ہے۔ تب آپ نے دعا کے لیے ہاتھ اٹھانے ہیں۔ اور اپنی مغفرت اور حاجت کے لیے جو دعا کرسکتے ہیں ۔ وہ کریں۔ انشاءاللہ! وہیں بیٹھے بیٹھے خزانہ غیب سے آپ کی کفایت ہوجائےگی۔

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *