وصال خاتون جنت فاطمۃ الزھراؓ

آپ ﷺ کی پیاری بیٹی حضرت فاطمۃ الزھرا رضی اللہ عنہ ہیں۔ آپ ﷺ کی پیاری بیٹی حضرت فاطمۃ رضی اللہ عنہ جب اس دنیا سے رحلت فرماگئیں۔ تو ہرسا ل ان کا عرس ِ مبارک عقیدت سے منایا جاتا ہے۔ تو ہمیں بھی ان کے عرس مبارک پر چند کلمات پڑھنے چاہئیں۔ جن سے آپ کے دل کو راحت پہنچے۔

اور ہم عقیدت مند بن جائیں۔اس کے لیے ایک ایسا عمل ہے جو دل کی مرادیں پوری کردے گا۔ حضرت فاطمۃ الزھرا رضی اللہ عنہ زاہدہ پاکیزہ تھیں۔آپ کی شان یہ تھی کہ جب آپ چکی چلاتے ہوئے تھک جاتیں۔ اور سو جاتیں تو فرشتے آکر چکی چلاتے تھے۔جب آپ گھر آتی تو حضور اکرمﷺ اپنی پیاری بیٹی حضرت فاطمۃ الزھرا رضی اللہ عنہ کے لیے کھڑے ہو جاتے۔کیونکہ آپؐ اپنی پیاری بیٹی کے ساتھ بہت محبت فرماتے تھے۔ایک بار آپ ﷺ کے پاس جنگ کا مال آیا۔اور کچھ غلام آئے۔ حضرت فاطمۃ الزھرا رضی اللہ عنہ بھی تشریف لائیں۔اور عرض کیا :اباجان کام بہت زیادہ ہوتے ہیں میں تھک جاتی ہوں اور مالِ غنیمت میں سے کچھ غلام مجھے دے دو۔ آپﷺ نے فرمایا کہ ہم اس لیے پیدا نہیں کیے گئے کہ غلاموں سے خدمت کروائیں۔البتہ میں تمہیں

ایسا کلمہ بتاتا ہوں۔اگر صبح و شام پڑھ لیا کروتو کبھی بھی تھکاوٹ نہ ہوگی۔ وہ کلمات کونسے تھے ۔33 بار سبحان اللہ، 33 بار الحمداللہ اور 34 بار اللہ اکبر پڑھو۔ایک بار آپ حضرت فاطمۃ الزھرا رضی اللہ عنہ کے پاس قریش کی چند عورتیں آئیں۔اور کہا کہ ہم آپ کو شادی میں مدعو کرنے کے لیے آئیں ہیں۔ تو آپ نے فرما یا میں ضرور آؤں گی۔ تو آپ نے اباجانؐ سے کہا کہ میرے پاس تو لباس نہیں ہے اور وہ تو قیمتی لباس پہنتی ہیں۔ آپﷺ نے فرما یا اللہ پربھروسہ کرو۔آپ رات کو سجدے میں گر گئے اور کہا اے رب میری عزت رکھنا۔اللہ کی رحمت جوش میں آئی اور جبرائیل ؑ کو حکم دیا کہ جنت سے جوڑا لے کر جاؤ۔چنانچہ حضرت جبرائیل ؑ جوڑا لیکر گئے۔اب وہاں کی عورتیں انتظار میں تھیں اور کہنے لگیں کہ دو جہاں کی بیٹی کیسے آتی ہیں۔اتنے میں خاتونِ جنت حضرت فاطمۃ الزھرا رضی اللہ عنہ پہنچیں۔آپ کو دیکھ کر بہت سی عورتوں کے ہوش اڑ گئے۔وہ عورتیں جو اپنے آپ کو امیر ترین عورتیں

کہلاوتی تھیں۔آپ کا نورانی لبا س دیکھ کر سب عورتیں مدہوش ہوگئیں۔قریش کی عورتیں کھڑی ہوں گئیں۔ جو کھڑی نہیں ہوئیں ان کے کان فرشتوں نے پکڑ کر کھڑا کر دیا۔کہ دیکھو کہ دوجہاں کی بیٹی تشریف لا رہی ہیں۔ اللہ نے جنت سے آپ کا جوڑا بھیجا ۔اس سے بہت سی عورتیں مسلمان ہوگئیں۔آج ہی گھر میں کوئی میٹھی چیز بنائیں۔اوراس پر فاتحہ کروائیں۔اس پر فاتحہ کا طریقہ یہ ہے کہ ایک بار سورت الفاتحہ پڑھیں۔تین مرتبہ سورت اخلاص پڑھنی ہے۔ پھر آپ کو جتنا قرآن کریم یاد ہے وہ پڑھنا ہے۔ اس کے بعد دس بار درود پاک پڑھنا ہے۔ اس کے بعد دعاکے لیے ہاتھ اٹھانے ہیں۔اے اللہ ! جو کچھ بھی پڑھا وہ حضرت فاطمۃ الزھرا رضی اللہ عنہ کی روح کو ایصال ثواب فرما۔ان کے وسیلے سے میری دل کی تما م مرادیں پوری فرما۔ان کے وسیلے سے میری حاجتیں پوری فرمادے۔میری مشکلات اور پریشانیاں دور فرمادے۔ہمارے رزق میں برکت عطا فرما۔آپ کی جو بھی حاجتیں اور مرادیں ہیں وہ حضرت فاطمۃ الزھرا رضی اللہ عنہ کی وسیلے سے مانگنی ہیں۔ انشاءاللہ ساری مرادیں پوری ہوں گی۔

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *