عورت کی بددعا سے کونسا ع ذاب آتا ہے؟

آج آپ کو بتائیں گے ان مردوں کے بارے میں جن کو ان کی عورتوں کی بد دعا لگی ہو۔ اور ناکامی ان کا مقدر بن رہی ہو۔ حضرت علی رضی اللہ عنہ رستے سے گزررہے تھے کہ انسان پر نظر پڑی ۔ اور وہ شخص پریشان ہو کر اپنی قسمت کورو رہا تھا۔ تو حضرت علی رضی اللہ عنہ اس شخص کے

پاس گئے ۔اور فرمانے لگے تمہارا چہرہ اس بات کا گواہی دے رہا ہے کہ تمہارے ساتھ تمہاری بیوی کی بددعا ہے۔ کہ میں نے اللہ کے رسول اللہ ﷺ سے سنا جو مرد اپنی عورت کو حقیر کم تراور اس کو ذلیل کرتا ہے۔تو عورت کی دل سے نکلے ہوئے بددعا مرد کی خوشحالی کو ختم کردیتی ہے۔ اور یوں وہ مرد ناکامی میں پڑجاتا ہے۔او رمایوسی اس کا مقدر بن جاتی ہے۔ تو وہ کہنے لگا یا علی ! عورت کی بددعا میرا نصیب کیسے خراب ہورہا ہو؟ تو حضر ت علی نے فرمایا: اللہ تعالیٰ عورت کو احساسات کی مٹی سے بنایا تاکہ وہ اپنے گھر والوں کا خیال دل سے رکھے۔ لیکن جو مرد اس عورت کے احساس، خیال اور محبت کا بدلہ تذلیل سے دیتا ہے۔ اس کی بے عزتی کرتا ہے ۔ تو عورت زبان سے کہے یا نہ کہے اندر ہی اندرٹوٹتی رہتی ہے۔ یہ اس زمین کا سب سے بدترین عمل ہے۔ عورت کے آنسو اس کی تکلیف آسمانوں تک پہنچتی ہے۔ جس گھر میں عورت کو ذلیل کیا جائے وہاں رزق کے دروازے اللہ بند کردیتا ہے۔ اور جو عورت اپنے گھر میں خوش رہتی ہے۔ اس کو اس کی عزت ومقام ملتا ہے۔ا ور وہ سکون میں آکر اپنی خوشحالی اور گھر کے سلامتی کےلیے دعا کےلیے ہاتھ اٹھاتی ہے۔ تو اللہ تعالیٰ اس کے ہاتھوں اس کی خوشحالی کی لاج رکھتا ہے۔ اور یوں اسے رحمتوں سے مالا مال کردیتا ہے۔ا ورخوشحالی اور برکت اس کا مقدر بن جاتی ہے۔

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *