حبشی جیسے ہاتھ اور پاؤں بالکل سفید گلاب جیسے

عموماً دیکھا گیا ہے کہ لوگ اپنے چہرے کے حسن و خوبصورتی کیلئے تو کئی کئی گھنٹے صرف کر دیتے ہیں لیکن ہاتھوں اور پیروں کی طرف ان کی توجہ نہ ہونے کے برابر ہوتی ہے۔ جس کا نتیجہ ہاتھوں اور پیروں کا پھٹنا‘ ایڑیوں کا زخمی ہونا اور چہرے سے پہلے ہاتھوں پر جھریاں پڑنے کی شکل میں ظاہر ہوتا ہے۔

ہاتھوں اور پیروں کو خوبصورت بنانے اور ان کی خصوبصورتی کو برقرار رکھنے کے کچھ قدیم و جدید طریقے بتائے جارہے ہیں۔جن کے استعمال سے آپ بھی خوبصورت اور نرم و ملائم ہاتھوں کے مالک بن سکتی ہیں۔ پیڈی کیور پاﺅں کی حفاظت کے جدید طریقے کو پیڈی کیور کہتے ہیں۔ اس کیلئے سب سے پہلے پاﺅں کے ناخنوں کو حسب منشا کاٹ لیں۔ سردیوں میں ہاتھوں اور پاؤں کا خشک ہوکر کالا ہوجانا ۔ کئی لوگ ایسے ہوتے ہیں جن کے جسم میں خون کم ہوتا ہے وہ بھی بہت بڑی بیماری ہے اگر آپ لوگوں کے اندر خون ٹھیک ہے آپ لوگ ایکسر سائز بھی ٹھیک کرتے ہیں پھر بھی آپ کے ہاتھوں اور پاؤں کی رنگت سانولی رہتی ہے آج ہم آپ کو ایسا ٹوٹکہ بتائیں گے ۔جو آپ کو آسانی سے مل جاتی ہے ۔ سب سے پہلے آپ نے ایک باؤل لینا ہے۔ سب سے پہلے ایک گلیسرین لے لینی ہے جو کسی بھی جگہ باآسانی مل جاتی ہے ۔یہ آپ نے تقریباً تین چمچ اس میں استعمال کریں گے ۔ یہ آپ لوگوں

ہاتھ اور پاؤں کو پھول کی طرح بنا دیگی ۔ پھر اس میں گلاب کا عرق استعمال کریں گے ۔یہ اس میں دو چمچ اس میں استعمال کرنے ہیں اس کے بعد آپ نے کلوبیویٹ کریم لے لینی ہے اور آدھی کریم اس میں استعمال کرنی ہے ۔ ہاتھوں اور پاؤں کی جلد تھوڑی سخت ہوتی ہے اس کو نرم کرنے کیلئے اور اس میں خوبصورتی لانے کیلئے اس کریم کے علاوہ بہت کم کریمی دیکھی گئیں جوہاتھوں اور پاؤں کو خوبصورت بناتی ہے۔ پھر سب سے پہلے ان تمام چیزوں کو اچھی طرح مکس کرلینا ہے پھر یہ بلیچ کی طرح کریم تیار ہوجائیگی ۔پھر اس میں ایک اور چیز اس میں استعمال کرنی ہے وہ ملتانی مٹی ہےجو آپ لوگوں کو کسی جگہ باآسانی مل سکتی ہے ۔ اس کو ایک حساب سے استعمال کرنی ہے زیادہ نہیں کرنی ۔ہمارے پاس ایک پیسٹ بن جائیگا پھر کسی برش کی مدد سے اپنے پاؤں اور چہرے پر استعمال کرنا ہے ۔ پھر اس پیسٹ کو لگا کر چھوڑ دینا ہے پھر آدھا گھنٹہ لگے رہنے کے بعد اس کو جو ہاتھ اور پاؤں کی کالی جگہ ہے وہاں اچھی طرح سے مسلیں پھر اس کو دھو ڈالیں ۔پھر آپ دیکھیں گےکہ آپ کے ہاتھ پاؤں بہت سفید ہوچکے ہوں گے اور میل کچیل ختم ہوجائیگی۔

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *