””بیڈ روم میں اگر میاں بیوی یہ کام کر لیں تو وہ دونوں شریکِ حیات نہیں رہتے بلکہ ۔۔““

اگر کوئی ضرورت کے وقت ہی آپ کو یاد کرے تو برا ہر گز نہ ما نیں کیونکہ لوگوں کو چراغ کی ضرورت تب ہی ہو تی ہے جب انکے اردگرد اندھیرے ہوں ہر وہ شخص گھٹیا کردار کا مالک ہے جو کسی کے دل میں جگہ بنانے کے بعد اس سے بہتر کی تلاش میں رہتا ہے۔ دولت جب بو لتی ہے تو

سچائی خاموش ہو جا تی ہے۔ فیصلہ ریل کی پٹڑی کے کانٹے کی طرح ہو تا ہے کانٹا غلط بد لا جا ئے تو ایک لمحے میں منزل بدل جا تی ہے۔ زندگی آسان کسی کی بھی نہیں ہو تی بس اپنی اپنی ادا کاری ہو تی ہے کوئی جھیل لیتا ہے اور کسی میں برداشت کرنے کی طاقت ختم ہو جا تی ہے۔ زندگی کا المیہ یہ بھی ہے کہ انسان کو کسی دوسرے سے نہیں بلکہ اپنوں کے ہاتھوں سے اذیت ملتی ہے۔ اس شخص کی صحبت سے بچو جو ق ی ا م ت کے دن کی ذلت و رسوائی سے نہیں ڈرتا ۔ آپ کو کیا لگتا ہے پگڑیوں کی عزت ہمیشہ عورت ہی چکاتی ہے؟ آپ کو لگتا ہے محبت صرف عورت ہی کر تی ہے؟ آپ نے کبھی محبت میں ہارا ہوا مرد نہیں دیکھا آخر مرد جو ٹھہرا شکست کو چہرے پر نہیں لا تا دکھ کو آنکھوں سے نہیں بہا تا ذمہ داریوں کے بو جھ سے نڈھال اپنی زندگی کی سب بڑی مات کو خاموشی سے قبول کر کے اس زخم کو سینے میں دبا دیتا ہے۔ یہاں تک کہ محبت کا زخم نا سور بن

کر اس کو وقت سے پہلے بوڑھا کر کے ق ب ر تک لے جا تا ہے۔ صرف پھول ہی نہیں کچھ انسانوں کی خصوصیات بھی ایسی ہو تی ہیں جنہیں دیکھتے ہی طبیعت کھل اُٹھتی ہے اور بات کر کے انسان کے دکھ کم ہونے لگتے ہیں کیونکہ وہ لوگ دکھ بانٹنے کا کام کر تے ہیں مگر ایسے لوگوں کا اب قحط پڑ چکا ہے اور جو بچ گئے ہیں ، وہ دکھ دینے والوں کے خوف سے غائب رہتے ہیں۔ جن سے محبت ہو تی ہے نہ انہیں اتنی آسانی سے دنیا میں گم ہونے کے لیے نہیں چھوڑا جا تا اسے پانے کے لیے آخری حد تک کوشش کی جا تی ہے۔ بہت سی شادی شدہ خواتین اپنے شوہر سے تنگ آکر غیر مردوں کو اپنے حالات بتاتی ہیں اور وہ مرد موقع سے فائدہ اٹھا کر گھر تباہ کر دیتے ہیں۔ شوہر کا تھوڑا احساس کر نا بیوی کے سارے غم ہلکے کر دیتا ہے۔ عورت کبھی بھی ادھار نہیں رکھتی ۔ محبت، عزت، وفا، خوشی اور نفرت سب دگنا کر کے لوٹاتی ہے۔ عورت کو اپنے شوہر کے سامنے کبھی اونچا نہیں بو لنا چاہیے یہی وہ شخص ہے جو آپ کو خوش رکھنے کے لیے اکثر با ہر گالیاں سنتا ہے ایک آپ پر اس کی حکمرانی ہو تی ہے کر لینے دیں اپنے مرد کو ہر لمحے یہ احساس دلا ئیں کہ وہ بادشاہ ہے ملکہ آپ خود بن جا ئیں۔

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *