حضور ﷺ کا فرمان ہے جو شخص عید کے روز

۔ نبی کریمﷺنے فرمایا : جس نے عید کے دن تین سو مرتبہ یہ کلمات ” سبحان اللہ وبحمدہ ، سبحان اللہ العظیم ” کو پڑھا۔ تو اس کا ثواب مسلمان جو ف.وت ہوچکے ہیں۔ ان کی ارواح کواس کاایصال ثواب کرے ۔ تو ہرمسلمان کی قب ر میں ایک ہزاور انوار داخل ہوتے ہیں۔ جب وہ پڑھنے والا خود مرے گا۔

تواللہ پاک اس کی قب ر میں بھی ایک ہزار انوار داخل کریں گے ۔اس عمل کے کرنے سے پہلے اول وآخر درود شریف پڑھے ۔ اور پھر تین سو مرتبہ ” سبحان اللہ وبحمدہ ” پڑھے۔ یہ عمل آپ نے عید کی نماز سے لے کر غروب آفتاب تک کسی بھی وقت پڑھ سکتے ہیں۔ یہ ایک چھوٹا سا عمل ہے لیکن اس کی بہت ہی فضیلت ہے ۔ لہٰذا گزارش ہے کہ اپنے اس خوشی کے موقع پر ایک پورے دن میں چند منٹ نکال کر اس عمل کو ضرور کریں۔ اور تمام مسلمانوں کے ساتھ ساتھ اپنے پیاروں کوبھی بخش دیں۔ تویہ ان کے لیے عید کا تحفہ ہوگا مرنے والوں کے لیے سب سےبڑا تحفہ ان کےلیے پڑھا جانے والا اور بخشا جانے والا عمل ہے۔ اللہ پا ک سے دعا ہے کہ اللہ تعالیٰ ہم کو اپنے فوت شدہ قریبی رشتہ داروں اور عزیزو اقارب کےلیے ایسے چھوٹے چھوٹے تحفوں کے ساتھ ان کو یا د کرنے کی توفیق عطا فرمائے۔

آمین۔جوشخص “سبحا ن اللہ وبحمدہ ، سبحان اللہ العظیم ” کی فضیلت اتنی زیادہ ہے کہ حضرت ابوہریرہ رضی اللہ تعالی عنہ سے روایت ہے کہ نبی پاک صلی اللہ علیہ و آلہ وسلم نے فرمایا کہ دو کلمے ایسے ہیں جو اللہ پاک کو بہت پسند ہیں زبان پر نہایت ہلکے اور میزان میں بہت بھاری ہیں۔بزرگ حضرات فرماتے ہیں کہ رحمت الہی کو اگر کوئی دعا متوجہ کر سکتی ہے تو وہ یہ کلمات ہیں۔

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.