عیدالفطر کےدن کا خاص وظیفہ

ماہ شوال کی پہلی تاریخ کو عید الفطر منائی جاتی ہے۔ جو مسلمانوں کے لیے انتہائی خوشی کاتہوار تصور کیاجاتاہے اور اس مہینے کے مسلمانو کی بڑی اہمیت ہے عید کے دن اللہ تعالیٰ اپنے بندوں پر خصوصی رحمت نازل فرماتاہے اس لیے اس دن کو یوم الرحمتہ کہتےہیں۔ کہاجاتا ہے کہ اسی دن اللہ تعالیٰ نے حضرت جبرائیل ؑ کو منتخب کیا۔

اور اسی روز اللہ نے شہد کی مکھیوں کو شہد کا چھتہ بنانے کےلیے الہام کیا۔ اور اسی ماہ کی سترہ تاریخ کو احد کے لڑائی شروع ہوئی۔ جس میں سید الشہدا ء حضرت امیر حمزہ رضی اللہ عنہ شہید ہوئے ۔ ان وجوہات کی بنا ء پر شوال المکرم کو بڑی اہمیت حاصل ہے حضرت ابو ہریرہ رضی اللہ عنہ سے مروی ہے کہ اپنے عید وں کو تکبیرو ں سے زینت بخشوں۔ ۔ نبی کریمﷺنے فرمایا : جس نے عید کے دن تین سو مرتبہ یہ کلمات ” سبحان اللہ وبحمدہ ، سبحان اللہ العظیم ” کو پڑھا۔ تو اس کا ثواب مسلمان جو ف.وت ہوچکے ہیں۔ ان کی ارواح کواس کاایصال ثواب کرے ۔ تو ہرمسلمان کی قب ر میں ایک ہزاور انوار داخل ہوتے ہیں۔ جب وہ پڑھنے والا خود مرے گا۔ تواللہ پاک اس کی قب ر میں بھی ایک ہزار انوار داخل کریں گے ۔یہ چھوٹا ساعمل تمام امت مسلمہ کی قبروں میں بے شمار انوار حاصل کرنے کا سبب ہے۔

اس لیے ہم سب کو چاہیے کہ عید والے دن اپنے ان پیاروں کے لیے بھی وقت نکالے جو اس دنیا سے رخصت ہوچکے ہیں۔ ان کو ہمارے ان اعمال کی ضرورت ہے۔ کیا پتہ کس کے اس عمل سے کس کی بخشش ہوجائے۔ اور کس کی قب ر روشن ہوجائے۔ آمین۔ ماہ شوال میں پہلی تاریخ بعد نماز ظہر کو آٹھ رکعت نفل کو دو سلام سے پڑھیں۔ ہر رکعت میں بعد سورت فاتحہ کے سورت اخلاص پچیس مرتبہ پڑھیں۔ بعد سلام ستر مرتبہ کلمہ تمجید اور ستر مرتبہ درود پاک پڑھیں۔ اللہ تعالیٰ ان نفل نماز کی برکت سے اس کی ستر حاجتیں پوری کرے گا۔ اور اس کے لیے رحمت کے دروازے کھول دے گا۔ اللہ ہم سب کےلیے آسانی پیدا کرے۔ ہم ان نوافل کو اداکرسکیں۔ اوراپنے پیاروں کے لیے جو اس دنیا سے جا چکے ہیں۔ ان کو یہ تسبیح کا تحفہ دے سکیں۔ آپ سب سے التجاہے کہ تھوڑا ساوقت نکال کر یہ تسبیح ضرور کرلیں۔ ان کوضرور بخشیے گا۔ اللہ تعالیٰ ان کے درجات بلند کرے۔ ان کوجنت الفردوس میں اعلی ٰ مقام عطا فرمائے۔

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.