رنگ اتنا زیادہ چمکے گا عید پر کریم لگانے کی ضرورت ہی نہیں ہوگی

آج کا نسخہ سکن وائیٹنگ کے حوالے سے ہے ۔ یہ ان لڑکیوں کے لیے ہے جو سکن وائٹنگ کرنا چاہتے ہیں۔یہ سوفیصد کام کرے گی۔ اس کا اچھا رزلٹ ملے گا۔ اس کے بنانے کا طریقہ بتاتے ہیں۔ ایک صاف باؤل لے لیں۔ اس میں ایک چمچ بیسن ڈال دیں۔ آدھا چمچ ملٹھی پاؤڈر ڈال دیں۔ دو چمچ دہی کے ڈال دیں۔

اس کے بعد آخر میں چاہیے ہوگا۔ روغن نیم یعنی نیم آئل۔اس کا آدھا چمچ ڈال دیں۔ نیم آئل سے کیاہوگا؟ آپ کے چہرے پر ایکنی ہے ان کو بھی سوٹ کرے گا۔ چھائیاں ہیں ان کو سوٹ کرے گا۔ ڈارک سپوٹ ہیں ان کو سوٹ کرے گا۔ اگر ڈارک پیچیز ہیں۔ ان کو بھی سوٹ کرے گا۔ اگر آپ کی سکن ڈبل ٹون ہے ۔ تو اس کو بھی سوٹ کرے گا۔ یہ ایسی ہوم نسخہ ہے جسے آئلی سکن سے لے کر ڈرائی سکن تک ہرکوئی استعمال کرسکتا ہے۔ ا سکا کوئی سائیڈ ایفیکٹ نہیں ہے۔ سب کے لیے مستقل طور پر سکن وائیٹنگ کی ہوم نسخہ ہے۔

جسے استعمال کرکے مستقل طور پر آپ اچھے ہوسکتے ہیں۔ آپ خوبصورتی پاسکتے ہیں۔ اب ان تمام اجزاء کو اچھی طرح سے مکس کر لیں۔ یہ پیسٹ سا بن جائے گا۔ اب اس پیسٹ کو اپنے چہرے پر اپلائی کردینا ہے۔ اب اس کو ایک منٹ کے لیے مساج کرلیں۔ کیونکہ اس میں ملٹھی پاؤڈ ر شامل کیا ہے یہ اسکربنگ کے کام بھی آئے گا۔ اس کوخشک ہونے دیں گے ۔ اس کو پانچ منٹ کے لیے چھوڑ دیں۔

پانچ منٹ کے بعد اسکی ایک اور تہہ لگا دیں۔ اس کو لڑکے بھی استعمال کرسکتے ہیں ۔ اب اس کو بیس منٹ کے لیے چھوڑ دیں۔ بیس منٹ کے بعد آپ کا پیسٹ اچھی طرح سے خشک ہو جائے گا۔ اپنے چہرے کو تھوڑا ساگیلا کریں۔ اور اپنے چہرے اچھے طریقے سے مساج کریں۔ بہت زیادہ رگڑنا نہیں ہے۔ آپ نے ہلکے ہاتھوں سے ختم کرناہے۔ اس کے بعد اپنے چہرے کو دھو لیں۔

چہرے کو دھونے کے بعد آپ کا چہرہ چودہویں کی طرح چمکے گا۔ اس کا اچھا رزلٹ ملے گا۔ آپ کی دیرینہ خواہش ہے کہ سکن وائیٹنگ کی بغیر کسی سائیڈ ایفیکٹ اور قدرتی نسخہ کے لیے ۔ تو یہ ایسی ہوم نسخہ ہے جو آپ کو جلدی رزلٹ دیتی ہے۔ اور مستقل آپ کی وائیٹنگ کو برقرار بھی رکھتی ہے۔ جسے چھوڑنے کے بعد آپ کی رنگت کالی نہیں ہوتی۔ اس پر کسی قسم کا کوئی سائیڈ ایفیکٹ نہیں ہوتا۔ کیونکہ اس میں ہم نے کسی قسم کا کوئی کیمیکل استعمال نہیں کیا۔ لڑکے اور لڑکیاں دونوں استعمال کرکے بہت زیادہ فائدہ اٹھا سکتے ہیں۔ آپ کو اچھا رزلٹ ملے گا۔

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *