ایک لیٹر پانی میں گرین ٹی اس طرح ملا ئیں۔ وزن تیزی کے ساتھ کم ہونے لگے گا۔ سات دن میں سات کلو وزن شرطیہ کم ہو گا۔

وزن کم کرنے سے پہلے آپ کے لیے یہ جاننا یقیناً ضروری ہے کہ وزن بڑھتا کیوں ہے؟ اس حوالے سے آگاہی حاصل کرنا آپ کے لیے اہم ہے تاکہ مستقبل میں آپ اپنے وزن کو دوبارہ بڑھنے سے روک سکیں۔وزن کے بڑھنے میں کیلوریز کا براہِ راست کردار ہوتا ہے، مثلاً آپ کتنی کیلوریز کھاتےہیں، اس میں

سے کتنی کیلوریز آپ جسمانی مشقت کے ذریعے استعمال کرتے ہیں اور کتنی آپ کے جسم میں بچ جاتی ہیں۔ آپ کو استعمال ہونے والی کیلوریز میں سے جسم میں بچ جانے والی کیلوریز میں توازن پیدا کرنا ہے۔ اگر آپ اپنے جسم میں ضرورت سے زیادہ کیلوریز بچا رہے ہیں اور انھیں جسمانی مشقت کے ذریعے استعمال نہیں کررہے تو یقیناً آپ کا وزن بڑھنا شروع ہوجائے گا۔ اپنا غذائی چارٹ بنائیں، جس میں ہر چیز کے سامنے اس کی کیلوریز درج ہوں۔ مثلاً، چینی، سوفٹ ڈرنکس اورپروسیسڈ ویجیٹیبل گھی میں بہت زیادہ کیلوریز ہوتی ہیں۔ اپنی غذا میں تازہ پھل اور سبزیاں شامل کریں، پروسیسڈ گھی اور چینی کا استعمال کم کریں اور جتنی کیلوریز کھائیں، انھیں جلانے کا انتظام بھی کریں۔زندگی اتنی مصروف ہوگئی ہے کہ لوگوں کے پاس اضافی کیلوریز اور اس کے نتیجے میں پیدا ہونے والی اضافی چربی کو جلانے کے لیے ورزش کرنے کے لیے وقت ہی نہیں ہے۔ اگر آپ اضافی کیلوریز اور چربی کو جلانے کے لیے ورزش نہیں کرسکتے تو وزن کم کرنا بھول جائیں۔جدت نے ہماری زندگیوں کو ایک طرف سہل بنادیا ہے تو دوسری طرف ہمارے رویوں میں کاہلی شامل ہوگئی ہے۔ورزش کے لیے خصوصی طور پر وقت نکالنا تو دور کی بات، لوگ چہل قدمی کرنا بھی بھول گئے ہیں۔

اپنے روز مرہ مصروفیات میں کم از کم چہل قدمی کو شامل کریں۔ اسکول، کالج، دفتر اورقریبی مارکیٹ جانے کے لیے ہر ممکن حد تک پیدل چلنے کو ترجیح دیں۔ یوگا سے بھی وزن کم کرنے میں مدد ملتی ہےزیادہ پر وٹین والی غذائیں موٹاپے سے بچاتی ہیں اپنی غذا میں زیادہ پر وٹین کا استعمال آپ کو موٹاپے سے بچانے میں مدد گار ثابت ہو تا ہے۔ باداموں کو کھا نا اپنی عادت بنا لیں ۔ ایک تحقیق کے مطا بق باداموں کو روزانہ کی خوراک کا حصہ بنانے سے تو ند میں کمی آ نے سے کافی زیادہ مدد ملتی ہے جو کہ امراضِ قلب کا خطرہ بڑھا دیتی ہے تحقیق میں بتا یا گیا ہے۔

کہ روزانہ بیالیس گرام باداموں کا استعمال موٹاپے سے تحفظ دے کر امراضِ قلب کا خطرہ کافی حد تک کم کر دیتا ہے اسی طریقے سے روزانہ ایک سیب کھانا ڈاکٹر کو دور رکھتا ہے مگر یہ موٹاپے سے بچاؤ کے لیے انتہائی اہم ثابت ہو تا ہے ایک تحقیق کے مطا بق سبز رنگ کے سیبوں کا روزانہ استعمال نہ صرف پیٹ بھرنے کے احساس کو بر قرار رکھتا ہے بلکہ یہ معدے میں موجود فائدہ مند بیکڑیا کی تعداد بھی بڑھانے میں مدد فراہم کر تا ہے۔

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *