گندم جو اور کلونجی کی روٹی کون کہتا ہے کہ شوگر لا علاج ہے۔

آج ہم بات کر یں گے ایک ایسے زبردست قسم کے نسخے کے بارے میں جو کہ شوگر کے حوالے سے ایک ایسا زبردست اعلیٰ پائے کا نسخہ ہے جسے بڑے بڑے حکماء اپنی زندگی میں استعمال کر چکے ہیں اس کی دوائیاں بنا بنا کر مختلف لوگوں میں بھیج چکے ہیں اور بہترین طریقے سے لوگ الحمداللہ ان تمام

ادویات سے بالکل صحت مند اور انتہائی درجے کی تسلی بخش زندگی گزار رہے ہیں ان کے اندر تین بنیادی چیزیں استعمال ہوتی ہیں گندم جو اور کلونجی اکیس دن کا یہ فارمولا ہے اور اکیس دن کے اندر پراپر طریقے کے ساتھ ان چیزوں کو استعمال کر نا ہے ۔ اس کے بعد آپ لوگ انتہا درجے کا چینج اپنی باڈی میں محسوس کر یں گے اور ان چیزوں کو یعنی جو کلونجی اور گندم کو اور اس کے ساتھ کلونجی کو آپ نے خاص طریقے سے استعمال کر نا ہے اور ایک خاص ٹائم پر استعمال کر نا ہے اور اس کے ساتھ ایک خاص عمل بھی ساتھ میں پڑھنا ہے تو یہ آپ لوگوں کی خدمت میں لے کر حاضر ہوا ہوں۔ تو یہ جو مستند نسخہ ہمارے حکما ء نے بتا یا ہے۔ طریقہ کار بڑا آسان ہے آپ کے پاس تین چیزیں ہیں پہلی ہے گندم دوسری ہے جو اور تیسر

ی ہے آپ کے پاس کلونجی اب گندم جس کے بارے میں ہم سب ہی جانتے ہیں۔ جب حضرت آدم ؑ کو پیدا فر ما یا تو کھیتی باڑے کے کام پر لگا دیا گندم کو پیدا کر تے تھے اور جنت کے اندر بھی گندم وہ باقی تمام اشیاء سے ہر چیز سے مختلف تھی تو گندم کی بڑی تاریخی اہمیت بھی ہے اور کلونجی کے بارے میں سب لوگ ہی جانتے ہیں کہ نبی پاک ﷺ نے ارشاد فر ما یا کہ کلونجی میں م و ت کے علاوہ ہر ایک مرض کا حل موجود ہے اس کی اہمیت کا اندازہ یہاں سے لگا ئیے کہ حضرت محمد ﷺ کو کلونجی بہت زیادہ مرغوب تھی اور آپ اس کے ساتھ ہی ساتھ اس کا مشورہ دیا کر تے تھے ۔ کہ تم بھی کلونجی کھا ؤ تا کہ تم بھی سکون سے اپنی زندگی گزار سکو اب اسی طریقے سے جو تیسری چیز ہے جو کہ ہم نے استعمال کرنی ہے وہ ہے جو اب جو کے بارے میں کون نہیں جا نتا ۔ حضرت عمر بن عبدالعزیز سے لے کر سرکارِ دو عالم حضرت محمد ﷺ تک ہر ایک بندہ جو ہے وہ جو کی

روٹی بڑے شوق سے کھا تا رہا ہے اور آج بھی جو کو دنیا کی چند مشہور ترین چیزوں میں گنا جا تا ہے آپ دیکھیں مغرب ممالک کی مثال لے لیں کہ وہاں بھی جو کا پا نی نکالتے ہیں اس کے اندر ا ل کو حل شامل کر تے ہیں جس کو ٹھیک کر نا مقصود ہو اندر کی گرمی ختم کر نا ہو جس کی اور جس کے آرگنز کو پراپر ورکنگ کے اندر لا نا ہو اس کے لیے جو استعمال کی جا تی ہے۔

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *