پندرہ شعبان کو ق ب ر ستان جانا کیوں ضروری ہے

شعبان کی پندرہویں شب کو عبادت کر نا بہت ہی فضیلت کا با عث ہے اس شب کو شبِ قدر اور شبِ برات بھی کہا جا تا ہے اس شب کی فضیلت کے بارے میں حضور نبی کریم ﷺ نے ارشاد فر ما یا کہ شعبان کی پندرہویں شب اللہ تعالیٰ آسمان ِ دنیا پر جلوہ افروز ہوتا ہے اور اس شب کو اپنے بندوں کے لیے بے شمار

دروازے اپنی رحمت کے کھول دیتا ہے اور فر ما تا ہے کہ کون ہے کہ آج کی رات مجھ سے بخشش کی طلب کر ے اور میں اس کے سارے کے سارے گ ن ا ہ معاف فر ما دوں گ ن ا ہ وں کو بخش دوں ہے کوئی رزق مانگنے والا کہ میں اسے رزق دوں اور ہے۔ کوئی مصائب میں مبتلا کہ میں اس کی مشکلات آسان کر دوں تا کہ اس کے مصائب ختم ہو جا ئیں یہاں تک کہ اللہ تعالیٰ کی رحمت کا سلسلہ جاری رہتا ہے یہاں تک کہ طلوع ِ فجر ہو جا تی ہے اس رات اللہ پاک کی خوب رحمتوں اور بر کتوں کا نزول ہو تا ہے اللہ کی بارگاہ میں خاص طور دنیا و آخرت کی بھلائی کی دعا مانگنی چاہیے کیونکہ اس رات دعائیں قبول ہو تی ہیں اللہ کے آخری نبی ﷺ نے پانچ راتوں کے بارے میں فر ما یا کہ ان میں دعا رد نہیں کی جا تی جن

میں سے ایک شعبان کی پندرہو یں رات شبِ برات ہے اللہ تعالیٰ انکساری کے ساتھ گڑ گڑا کر روتے ہوئے اپنے گناہوں کی معافی مانگنا انسان کو حقیقی کامیابی سے ہمکنار کر تا ہے اللہ تعالیٰ اس بندے پر اپنی رحمت کا نزول فر ما تا ہے۔ پندرہ شعبان کو ق ب ر ستان جانا سنت ہے ق ب ر ستان جا کر اپنے مرحو مین کے لیے ا یصالِ ثواب اور دعائے مغفرت کر یں م ر د ہ کو نصیحت حاصل ہوتی ہے اور اگر ان کے لیے دعائے مغفرت نہ کی جا ئے تو وہ پریشان ہو جا تے ہیں۔ سرکار دو عالم ﷺ کا ارشاد ہے کہ مردے کا حال ق ب ر میں ڈوبتے ہوئے انسان کی مانند ہے کیونکہ وہ شدت سے انتظار کر تا ہے کہ ماں باپ بہن بھائی اولاد یا کسی دوست کی دعا اس تک پہنچے اور جب کسی کی دعا اس تک پہنچتی ہے تو اس کے نزدیک یہ دعا بہتر ہوتی ہے اللہ ق ب ر والوں کو ان کے زندہ متعلقین کی طرف سے حدیہ کیا ہوا پہاڑوں کی مانند عطا فر ما تا ہے۔

زندوں کا حدیہ م د و ں کی دعائے مغفرت کر نا ہے اس مہینے میں پندر ہو یں شب کو چھ رکعت نفل نماز دو دو رکعت کر کے پڑ ھیں پہلے دو نفل پڑھنے سے پہلے عمر میں خیرو بر کت کی نیت کر یں۔ دوسرے دو نفل پڑھتے ہوئے بلاؤں سے محفوظ رہنے کی نیت کریں اور تیسرے دو نفل پڑھتے ہوئے مخلوق کا محتاج نہ ہونے کی نیت کر یں اور ہر دو رکعت ادا کرنے کے بعد ایک مرتبہ سورۃ یٰسین اور اکیس مرتبہ سورۃ اخلاص پڑھیں پھر اللہ کے حضور دعا کر یں تو اللہ عمر میں خیرو بر کت عطا فرمائیں گے۔ ہر مصیبت سے محفوظ رکھیں گے اور بے تحاشہ رزق عطا فر ما ئیں گے۔

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.