سورۃ بقرہ کی آخری آیت کا با کمال وظیفہ

آج ہم جو آپ کے لیے وظیفہ لے کر آ ئے ہیں ۔ یہ سورۃ بقرہ کی آخری دو آیات کا وظیفہ ہے۔ انشاء اللہ تعالیٰ اللہ کے فضل و کرم سے خالی دامن خوشیوں سے بھر جائیں گے۔ خالی جھولیاں اللہ کی رحمت و کرم سے بھر جائیں گی اور ہر وہ مراد پوری ہو گی جس کا آپ نے سوچا تک بھی نہ ہوگا۔ تو انشاء اللہ یہ وظیفہ آپ کی زندگی

کے اندر ایک تبدیلی کی صورت میں واضح ہوگا۔ سورۃ بقرہ کی آخری دو آیت کی فضیلت کے متعلق حضرت ابنِ مسعود سے روایت ہے کہ رسولِ کرم ﷺ نے ارشاد فر ما یا کہ جس سورۃ بقرہ کی آخری دو آیات کو پڑ ھا تو وہ اس کے لیے کافی ہو جائیں گی۔ اگر وہ رات کو پڑ ھ کر سو جاتا ہے تو رات بھر یہ شخص جنوں بشر کی شرارتوں سے محفوظ رہے گا۔ دوستوں قرآنِ مجید کی عظمت و بزرگی کے لیے یہی کا فی ہے کہ وہ مالک ارض و سماں کا کلام ہے۔ تمام عیبوں سے پاک ہے۔ فصاحت و بلاغت کا یہ وہ آخری نقطہ عروج کہ بڑے بڑے فصیح و بلایغ اس کے سامنے جھک جا تے ہیں۔ آپ ﷺ سے پہلے کسی نبی کو نہیں دیئے گئے۔ ایک سورۃ فاتحہ اور دوسرا سورۃ بقرہ کی آخری دو آیات آپ ﷺ ان میں سے جو بھی پڑ ھیں گے تو آپ ﷺ کو ملے گا۔ یعنی اگر تعریفی کلمات ہیں تو تعریف کر نے کا ثواب ملے گا اور اگر دعا کا جملہ ہے تو دعا قبول ہو گی۔ حضرت ابو مسعود انصاری کی روایت کردہ ترمذی شریف کی یہ حدیث کہ جو شخص سورۃ بقرہ کی آخری دو آیات پڑھ لیتا ہے تو یہ دونوں آیتیں اس کے لیے کافی ہو جائیں گی۔ علماء نے اس کے دو مطلب لیے ہیں۔ ایک یہ کہ وہ اس رات ہر برائی سے محفوظ رہے

گا۔ دوسرا یہ کہ وہ آیتیں تحجد کا قائم مقام ہو جائیں گی ۔ سبحان اللہ ۔ کیا ہی خوبصورت بات۔ ایک اور جگہ پر لکھا ہے کہ اللہ تعالیٰ کو سورۃ بقرہ کو ایسی دو آیتوں پر ختم کیا جو مجھے اس خزانے خاص سے عطا کی گئیں اور جو عرشِ بریں کے نیچے ہیں لہٰذا انہیں سیکھو اور یاد کرو او ر اپنے گھر کی عورتوں کو اور بچوں کو بھی سکھلا ؤ اور یاد کراؤ اس لیے کہ وہ سا مانِ رحمت ہیں اور حاصل قرآن ہیں اور دعائیں عظیم ہیں ۔ تو دوستوں سورۃ بقرہ کی بہت ہی زیادہ فضیلت اور بر کت ہے۔ اس کے پڑ ھنے سے انسان طرح طرح کی بلاؤں سے محفوظ رہتا ہے۔ اور طرح طرح کے شر سے بھی محفوظ رہتا ہے۔ پھر یہ سورۃ بقرہ کی آخری آیات بہت ہی زیادہ برکت والی ہیں۔ ویسے تو ساری ہی سورۃ بہت برکت والی ہے لیکن سورۃ بقرہ کی آخری آ یات بہت ہی زیادہ بر کت والی ہیں۔ اللہ تعالیٰ ہمیں اسے پڑھنے کی توفیق عطا فر ما ئے۔ آ مین۔

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.