اپنی دولت خوشی کے راز قیمتی چیزوں کو اپنوں سے چھپاؤ

یہ وہ دور ہے کہ ہمارے جتنے بھی راز ہیں ہمارے جتنی بھی باتیں ہیں۔ آج جس دور میں میں اور آپ زندگی بسر کر رہے ہیں جی رہے ہیں یہ وہ دور ہے کہ ہم اور ہمارے جتنے بھی راز ہیں ہمارے جتنے بھی خوشی کی باتیں ہیں ہمارے راز ہیں چاہے وہ مالی ہوں شادی بیاہ کے اعتبار سے جو ملازمت کے

اعتبار سے ہوں یا مختلف ہمارے راز ہوتے ہیں خوشی کی باتیں ہوتی ہیں خوشی کے موقعے ہوتے ہیں تو ہمیں ان رازوں کو ان خوشی کی باتوں کو چھپا کر رکھنا چا ہیے ان باتوں کو ان رازوں کو کسی کے بھی آگے کھول کر نہیں رکھ دینا چاہیے ورنہ ہمیں نظر لگ جائے گی اور اس انتہا کی نظر لگے گی کہ جس طرح سے ہم نے کبھی سوچا ہی نہ ہوگا۔ اور اس انداز میں ہم دوسروں کی نظروں میں بھی آجائیں گے جیسا کہ سب لوگ ہی اس بات سے واقف ہیں کہ کوئی بھی آج کے دور میں کسی کی بھی ترقی بردداشت نہیں کرتا ہے اور نہ ہی یہ چا ہتا ہے کہ وہ جو ہے اس انسان سے آگے نکل جائے یا ہم سےآ گے نکل جائے ہر کوئی آج کے دور میں ہر انسان ہی چاہے وہ مرد ہے چاہے وہ عورت ہے وہ حسد کی آگ میں جل رہا ہے اور اسی آگ میں جل جل کر اپنی روزی روٹی پر بھی لات ما ر دیتا ہے اور اس طرح سے برتاؤ کرتا ہے کہ جیسے اس نے اس انسان کو یہ سب فراہم کیا ہے ارے عزت اور ذلت تو اللہ کے ہاتھ میں ہی ہے اللہ نہیں چاہتا ہے۔

کہ وہ اپنے بندوں کو کسی کے بھی آگے رسوا کر ے لیکن آج کا انسان اس بات سے نا واقف ہے کہ اس کو رزق دینے والی کوئی اور نہیں بلکہ اللہ کی ہی ذات ہے اللہ ہی سب کو عزت دینے والی ذات اور اللہ ہی سب کو ذلت دینے والی ذات ہے ہم یہ سب کچھ ہی بھول چکے ہیں اور حسد کی آگ میں اس قدر جلس چکے ہیں کہ ہم دوسروں کو بھی اپنے ساتھ ساتھ دوسروں کو بھی اس آگ میں جلا نا چاہتے ہیں۔ ۔ تو میں یہی بات کہنا چا ہا رہا ہوں کہ اپنے راز اپنے تک ہی رکھو تا کہ دوسروں کے فتنوں سے بچ سکو اور اس کے ساتھ ساتھ دوسروں کی سازشوں سےدوسروں کے حسد وں سے دوسروں کی چالوں سے بچ سکو اور اس کے ساتھ ساتھ بہت سے نقصانات مثلاً کہ تعویزات سے بھی بچ سکو۔ اللہ تعالیٰ ہم سب کو اپنے حفظ و امان میں رکھے اور دوسروں کی چالوں سےدوسروں کے فریبوں سے دوسروں کی چالوں سے ہمیں ہمیشہ ہمیشہ محفوظ رکھے۔

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.