پہلے بچے کی پیدائش کے26دن بعد خاتون کے ہاں جڑواں بچوں کی پیدائش

بنگلہ دیشی خاتون نے پہلے بچے کی پیدائش کے 26 روز بعد جڑواں بچوں کو جنم دے دیا جس سے ڈاکٹر بھی حیران ہو گئے۔ ذرائع کے مطابق 20 سالہ عارفہ سلطان نے گزشتہ ماہ تینوں بچوں کو جنم دیا تھا۔ گائنی کولوجسٹ شیلا پوڈر نے بتایا کہ ’انہیں معلوم نہیں ہو سکا تھا کہ پہلے بچے کی پیدائش کے وقت بھی

خاتون دو بچے سے ح، املہ تھی‘۔ ڈاکٹر شیلا نے بتایا کہ عافہ سلطان کو 26 دن بعد ہی دوبارہ ہسپتال لایا گیا جہاں انہوں نے دو صحت مند جڑواں بچوں کو جنم دیا۔ گائنی کولوجسٹ کا کہنا تھا کہ ح، املہ خاتون نے ایک لڑکا اور ایک لڑکی کو جنم دیا اور تینوں بچے اب صحت مند ہیں۔ سرکاری ہسپتال کے ہیڈ ڈاکٹر دلیپ

روئے نے کہا کہ انہوں نے اپنی 30 سالہ طبی تاریخ میں ایسا کبھی نہیں دیکھا کہ خاتون نے بچے کو جنم دیا اور محض 26 دن بعد ہی جڑواں بچوں کو جنم دیا ہو۔دوسری طرف سلطانہ کا کہنا تھا کہ وہ تین بچوں کی پیدائش پر بہت خوش ہے لیکن بچوں کی پرورش سے متعلق خدشات سے پریشان

بھی ہے۔ عارفہ نے کہا کہ وہ غریب گھرانے سے تعلق رکھتی ہے اور اس کا شوہر ماہانہ 10000روپے کماتا ہے۔ سلطانہ نے کہا کہ ’میں نہیں جانتی کہ اس معمولی رقم سے اتنی بڑی ذمہ داری کیسے انجام دے سکوں گی‘۔ واضح رہے کہ ہارورڈ ٹی ایچ چن اسکول آف پبلک ہیلتھ کی تحقیق میں دریافت کیا جا چکا ہے کہ ایک حمل سے دوسرے حمل میں 12 سے 18 ماہ کا وقفہ بچے اور ماں دونوں کے لیے محفوظ ثابت ہوتا ہے۔ تحقیق کرنے والوں کا کہنا ہے کہ یہ نتائج ان جوڑوں کے لیے انتہائی اہمیت رکھتے ہیں جو کہ بہت کم وقت میں زیادہ بچوں کی پیدائش کے خواہش رکھتے ہیں۔

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.