پاکستانی سیاست میں ’انٹرنیشنل پلیئرز‘ کی انٹری! پنجاب میں تبدیلی کے لیے کون متحرک ہوگیا؟ پرویز الٰہی سے رابطہ ، ہلچل مچانے کی تیاریاں شروع

سینئر صحافی حامد میر نے کہا کہ پاکستان کی سیاست میں کئی انٹرنیشنل پلئیرز شامل ہیں۔عمران خان پر پی ڈی ایم کا نہیں کسی اور کا دباؤ ہے۔اگر پی ڈی ایم کے غبارے سے ہوا نکل چکی تو پھر وزیراعظم کس خوف زدہ جو سینٹ الیکشن پر شور کر رہے ہیں۔تحریک عدم اعتماد کی بات مسلم لیگ ن کو کرنی چاہئیے۔

پی پی تو چھوٹی پارٹی ہے لیکن ہو سکتا ہے کہ پی پی کو کسی طرف سے یقین دہانی کرائی گئی ہو۔ آصف زرداری مل کر پنجاب میں تبدیلی لانا چاہتے ہیں اور پرویز الہیٰ سے رابطے میں ہیں۔حامد میر نے مزید کہا کہ عمران خان کی وزراء کی ٹیم نے چوہدری برادران کے پاس جاکر سرنڈر کردیا ہے یہ آصف زرداری کی وجہ سے پرویزالٰہی کی بڑی کامیابی ہے، آصف زرداری اور پرویز الٰہی میں مسلسل رابطے میں ہیں، آصف زرداری چاہتے ہیں پنجاب اور بلوچستان میں تبدیلی کے بعد اسلام آباد میں تبدیلی لائی جائے۔

سینئر تجزیہ کار و اینکر پرسن کے مطابق سابق وزیر اعظم نوازشریف کو یقین تھا کہ بڑی طاقتیں عمران خان کو ہٹا دیں گی، لیکن ایسا ہوا نہیں ، اب پی ڈی ایم کے سربراہی اجلاس میں لانگ مارچ اور دھرنوں اور استعفوں کی طرف جانے کی بات کی جائے گی ، درمیانی راستہ نکالنے کی بھی کوشش کی جائے گی اگر درمیانی راستہ نہ نکلا توہوسکتا ہے کہ مسلم لیگ ن اور جے یوآئی ف، قوم پرست جماعتیں، پیپلزپارٹی کو چھوڑ کر خود استعفوں کا اعلان کردیں۔

انہوں نے کہا کہ جب وزیراعظم کہتے ہیں کہ مہنگائی کم ہوگئی ہے،لیکن ایسا نہیں ہے، یہاں ملازمین مہنگائی کیخلاف احتجاج کررہے تھے، متاثرین مہنگائی نے 10فروری سے دھرنے کا اعلان کیا ہے۔ عمران خان سے جب کچھ اہم لوگ ہفتے میں دوتین بار جاکر ملاقات کرتے ہیں توان کا ایجنڈا یہی ہوتا ہے کہ مہنگائی قابو سے باہر اوربہت زیادہ ہوگئی ہے ، تنخواہ دار طبقہ کچلا جاچکا ہے کچھ کریں ، جس پر عمران خان ہر باریہی کہتے کہ کچھ کرتے ہیں، سینیٹ کا الیکشن بھی آرہا ہے، عمران خان نے شورمچانا شروع کردیا ہے کچھ کریں، وہ خود حکومت میں ہیں پھر بھی ہارس ٹریڈنگ سے خوفزدہ ہیں، پتا نہیں ان کو کس سے خوف ہے۔

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.